7

مقبوضہ کشمیر میں دو نوجوانوں کی شہادت پر ہڑتال، مظاہرین پر بھارتی فوج کی شیلنگ

مقبوضہ کشمیر میں بدھ کو بھارتی غاصب فوج کے ہاتھوں 2 نوجوانوں کی شہادت کے بعد وادی بھر میں مظاہرے جاری ہیں جبکہ شوپیاں میں جمعرات کو ہڑتال کی گئی۔ دوسری جانب بھارتی فورسز کی جانب سے مظاہرین پر آنسو گیس کی شیلنگ کی گئی۔

مقبوضہ کشمیر میں حالیہ دنوں میں بھارتی فوج کی جانب سے انسانی حقوق کی سنگین خلاف ورزیاں جاری ہیں۔ بدھ کو شوپیاں میں قابض فوج نے فائرنگ کرکے 2 نوجوانوں کو شہید کردیا تھا۔

نوجوانوں کی شہادت کے بعد وادی بھر میں احتجاجی مظاہرے جاری ہیں جبکہ شوپیاں میں مکمل ہڑتال کی گئی۔

پلوامہ کے مختلف علاقوں میں بھارتی فوج نے کشمیریوں کو گھروں میں محصور رکھنے کے لیے آنسو گیس کی شیلنگ کی جس کے باعث متعدد مظاہرین کی حالت غیر ہوگئی۔

دوسری جانب مقبوضہ بھارتی پولیس نے امت اسلامی کے ضلعی صدر اعجاز نوری کو پلوامہ میں ان کی رہائش پر چھاپے کے دوران گرفتار کرلیا ہے۔

کشمیر میڈیا سروس کے مطابق پولیس اہلکاروں نے ان کے گھر میں زبردستی داخل ہو کر توڑ پھوڑ کی اورسامان کو نقصان پہنچایا۔ اعجاز نوری ضلع پلوامہ میں بھارتی فوجیوں کے ہاتھوں شہید ہونے والے نوجوانوں کی نماز جنازہ میں شرکت کے علاوہ سوگوار خاندانوں سے یکجہتی اور ہمدردی کا اظہار بھی کرتے رہتے تھے ۔

امت اسلامی کے ترجمان نے کہا ہے کہ اعجاز نے حال ہی میں پامپور میں شہید نوجوان محمد امین ڈار کی نماز جنازہ پڑھائی تھی اور انہیں انہیں جنازے کی امامت کرنے پر بھارتی فورسز کی طرف سے مسلسل دھمکیاں دی جارہی تھیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں