16

پاکستانی طالبہ سبیکا کے والدین نے امریکی عدالت سے رجوع کرلیا

والدین کی جانب سے دائر درخواست میں کہا گیا ہے کہ قاتل نوجوان کے والدین اپنے بیٹے کی دماغی حالت سے واقف تھے اور جانتے تھے ان کا بیٹا کسی کو نقصان پہنچا سکتا ہے۔

اٹھارہ مئی 2018 کو ٹیکساس کے اسکول میں فائرنگ کا واقعہ پیش آیا تھا جس میں پاکستانی طالبہ سبیکا سمیت 10 طلبہ جاں بحق ہوگئے تھے۔

سبیکا کو کراچی کے قبرستان میں سپرد خاک کردیا گیا

درخواست میں سوال اٹھایا گیا ہے کہ دماغی حالت خراب ہونے کے باوجود قاتل تک ہتھیار کیسے پہنچا؟۔

سبیکا کے والدین نے قاتل نوجوان کے والدین کےخلاف کارروائی کی درخواست کرتے ہوئے ہرجانے کا دعویٰ بھی کیا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں