آئی ایم ایف نے قرض منظور کرلیا، پاکستان کو 6 ارب ڈالرز دینے کیلئے تیار

بین الاقوامی مالیاتی فنڈ (آئی ایم ایف) نے پاکستان کو 6 ارب ڈالرز قرض دینے کی منظوری دیدی ہے۔

آئی ایم ایف ایگزیکٹو بورڈ کی جانب سے پاکستان کیلئے یہ قرض پروگرام منظور کیا گیا ہے۔ آئی ایم ایف 3 سال میں رقم ادا کرے گا۔ رواں مالی سال پاکستان کو 2 ارب ڈالر قرض ملے گا۔

ذرائع کے مطابق پاکستان نے بجلی اور گیس کی قیمتوں میں اضافے سمیت سٹاف لیول مذاکرات میں طے پانے والی پیشگی شرائط پوری کر دی ہیں۔ اخراجات میں کمی اور بجٹ میں آمدن بڑھانے کیلئے اقدامات کی طرف بھی پیشرفت ہوئی ہے۔ متعدد شعبوں میں ٹیکس رعایتیں ختم اور اصلاحات کیلئے اہم اقدامات کئے جا رہے ہیں۔

معاون خصوصی اطلاعات ونشریات ڈاکٹر فردوس عاشق اعوان نے ٹویٹ میں کہا کہ پاکستان کی معاشی محاذ پر کلیدی کامیابی، آئی ایم ایف کی پاکستان کے لیے پیکج کی منظوری وزیراعظم کے معاشی ویژن پر اعتماد کا اظہار ہے۔

مشیر خزانہ ڈاکٹرعبدالحفیظ شیخ نے ٹویٹر پر پیغام دیا کہ آئی ایم ایف بورڈ نے توسیعی فنڈز سہولت کے تحت پاکستان کے لیے 6 ارب ڈالر کی منظوری دیدی ہے۔ توسیعی فنڈز کا مقصد پاکستان کے اصلاحاتی پروگرام کو سپورٹ کرنا ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں